Understanding online grooming – explained for parents in Urdu

Grooming is a process used by offenders and predators to prepare vulnerable young people and children for:

  • sexual abuse
  • criminal activity
  • violent and nonviolent extremism
  • It’s a process, not a one-off event or act
  • It starts with befriending online via social media
  • Groomers use social media that use messaging, images and video such as Facebook, WhatsApp, Instagram, Shap Chat۔
  • Groomers build trust by flattering someone, sharing stories or common interests like hobbies
  • They create a bond where the child or young person is afraid to speak to an adult about what is happening
  • They make sure parents do not know what is going on

Parents should be vigilant

  • Ask your child to share what social media and website they visit and use
  • Ask your child what they are doing online
  • Ask them about their anxieties or worries
  • Is your child secretive or unhealthy level of internet use
  • Tell them about stranger danger
  • Be aware who they are chatting to
  • What information are they sharing and with who?
  • Let them know you are always there to support them
  1. If you are a young person or child let your parent know if anyone has made any inappropriate suggestions
  2. If in immediate risk call 999 if your child is about
  3. to meet up with an offender or Via the CEOP website

https://www.ceop.police.uk/safety-centre/

ASK SAM on Childline

https://childline.org.uk/get-support/ask-sam/

 

Understanding online grooming – explained for parents in Urdu

 تر بیت ایک ایسا عمل ہے جو کہ مجرموں  اور شکاری افراد کی طرف سے کمزور نو جوان  افراد اوربچوں کو تیار کرنے کے لئے استعمال کیا جاتا ہے  جیسے کہ:

  • جنسی زیادتی
  • مجرمانہ سرگرمی
  • تشدد اور عدم تشدد انتہا پسندی

Ø   یہ ایک  عمل ہے  جو کہ ایک ایونٹ یا  فعل  نہیں ہے۔Ø   یہ سوشل میڈیا کے ذریعہ آن لائن دوستی کے ساتھ شروع ہوتا ہےØ   گرو مرز    یپغامات، تصاویر اور ویڈیو ز کے لیے سوشل میڈیا کا استعمال کرتے ہیں   جیسے کہ فیس بک،  وائس ایپ , انسٹاگرام سنیپچیٹ،Ø   گرو مرز    لو گوں کی خوشآمد کر کے ، کہانیاں سنا  کے یا اپنے ایک جیسےشوق بتا  کر، اپنا اعتماد بڑہاتے ہیں۔Ø   وہ ایک تعلق قا ئم کرتے  ہیں کہ  کیا  وہ  بچا یا نوجوان شخص کسی بالغ  کو بتا نے سے ڈرتا ہے  جو کچھ اس کے ساتھ ہو رہا ہے۔Ø   وہ  اس بات کو یقینی بناتے ہیں کہ والدین کو  معلوم  نہ ہو کہ کیا چل رہا ہے۔

والدین کو محتاط ہونا چاہئے

Ø   اپنے بچے سے پوچھیں کہ وہ کس  سوشل میڈیا اور کس  ویب سائٹ  کو ویزٹ کرتے ہیں اور استعمال کرتے ہیں

Ø   اپنے بچوں سے پوچھیں کہ وہ آن لائن کیا کر رہے ہیں

Ø   ان سے  ان کی پریشانیوں یا خدشات کے بارے میں پوچھیں

Ø   کیا آپ کا بچہ انٹرنیٹ کا  خفیہ یا غیرصحت مند سطح پر استعمال کر رہا ہے؟

Ø      اجنبی خطرے کے بارے میں انہیں بتائیں

Ø   اس بات سے آگاہ ہوں کہ وہ  کس سے چیٹ یا بات  کر رہے ہیں

Ø   وہ کونسی معلومات کس سے شیر کر رہے ہیں ؟

Ø   انہیں بتائیں کہ آپ ہمیشہ ان کی حمایت کرنے کے لئے وہاں ہیں

اگر آپ ایک نوجوان شخص یا بچے ہیں تو آپ اپنے والدین کو بتا یں اگر کسی نے آپکو  غیر مناسب مشورہ  دیا  ہے۔

اگر کوئی  فوری خطرہ ہو تو  999  پر کا ل کریں اگر آپ کا بچہ کسی مجرم سے ملنے والا ہے تو CEOP کی ویب سائٹ کے ذریعے سے بتائیں ۔

https://www.ceop.police.uk/safety-centre/

ASK SAM on Childline

چا لڈ لائن پر  SAMسے  پوچھیں

https://childline.org.uk/get-support/ask-sam/

 

Share This Post:
Facebooktwitterpinterestlinkedintumblr

About the author: admin